Jump to content
Sign in to follow this  
sharib

Alam le kr chaley jab Hyder e Karrar Khyber

Recommended Posts

سید اقبال رضوی شارب

منقبت ( Misra e tarah alam le kr chale jb Hyder e karraR khyber mein )

ہت سے سورما جب ہو گئے لاچار خیبر میں

علم لے کر چلے تب حیدرِ کرّار خیبر میں

 

کھلونے کی طرح اک ہاتھ میں پکڑا تھا حیدر نے

بہت سے کھولتے تھے مل کہ جو اک *دوار خیبر میں

 

تھے جنکی نسل میں مومن انہیں وہ چھوڑ دیتی تھی

علی کے ہاتھ سے چلتی تھی جب تلوار خیبر میں

 

علم دوں گا اسے الله جسے محبوب رکھتا ہے

قصیدہ پڑھ رہے تھے یوں مرے سرکار خیبر میں

 

أحد بھی بدر بھی خندق بھی پیشِ مصطفیٰ ٹھہری

بنے یوں ہی نہیں حیدر سپہ سالار خیبر میں

 

علی ہر جنگ میں میدان کیسے مار لیتے ہیں

اسی الجھن میں تھے کچھ کاغذی جرّار خیبر میں

 

علی کی چشمِ آشوباں نے اک موقع دیا جنکو

جری بن کر گئے پر ہو گئے فرّار خیبر میں

 

کیے مرحب کے دو ٹکرے فقط اک وار میں جس دم

تو گویا توڑ دی اک آہنی دیوار خیبر میں

 

جواں ہونے لگیں پسپا امیدیں ڈوبتی نبضیں

علم لے کر چلے جب حیدرِ کرّار خیبر میں

 

علی کے بغض میں خیبر کو مت آساں کہو بھائی

اگر تھا سہل تو بھاگے تھے کیوں فرّار خیبر میں

 

نہ اب ایڑی پہ یوں اچکو نہ پنجوں کا سہارا لو

دکھائی کیوں نہ اب تک قوّتِ یلغار خیبر میں

 

 کسی کا یا علی کہنا کوئی بدعت نہیں شارب

وگرنہ پڑھتے کیوں نادِ علی سرکار خیبر میں

* hindi ka lafz dwar yani darwazah

Edited by sharib

Share this post


Link to post
Share on other sites
On Friday, April 21, 2017 at 10:44 AM, Sindbad05 said:

Buhut Khob bhai Masha-Allah :)

Bahot Shukria bhai.

Apke reaction se bazm zindah rahti hai

Abhi tak 67 readings ho chukin magar react sirf apne kiya.

Deeger membran bhi  zaroor react karien agar napasand ho to bhi yh  guzaarish hai.

wassalam

 

Share this post


Link to post
Share on other sites

Create an account or sign in to comment

You need to be a member in order to leave a comment

Create an account

Sign up for a new account in our community. It's easy!

Register a new account

Sign in

Already have an account? Sign in here.

Sign In Now

Sign in to follow this  

×